اُردو انجمن

 


مصنف موضوع: ایک نہایت اہم بات  (پڑھا گیا 2438 بار)

0 اراکین اور 1 مہمان یہ موضوع دیکھ رہے ہیں

غیرحاضر dr maqsood hasni

  • Adab Dost
  • ***
  • تحریریں: 819
جواب: ایک نہایت اہم بات
« Reply #15 بروز: فروری 20, 2016, 03:41:04 صبح »
maire mota'alaq ghar main yah'hi moghalta chala aa raha hai kah abhi giya bas ab samjho gya laikin gya nahain hoon. jab bhi zara tabiyat sambhalti hai likhnay parhnay bhaith jata hoon. maire khaesh hai kuch na'kuch karta howa jaoon. agarchah yah karna baikar samjha jata hai phir bhi yah baikar kaam karnay par tabiat ke hawala se majboor hoon. Raz sahib se bare admi ke monh se yah son kar ajeeb laga hai kah woh kaam nahain kar saktay. na karna shaed oon ke bas main nahain rahe ga.
Allah onhain ta'akhir karta hi rakhe
plz sab kaho amein

غیرحاضر kafilahmed

  • Adab Shinaas
  • **
  • تحریریں: 389
جواب: ایک نہایت اہم بات
« Reply #16 بروز: فروری 20, 2016, 08:16:17 صبح »

یاران اردو انجمن: سلام مسنون!

آپ کو یاد ہوگا کہ کچھ ہی عرصہ قبل اردو انجمن کو بند کرنے کا ارادہ ظاہر کیا گیا تھا۔ میں دل کا مریض ہوں اور گزشتہ دنوں کافی پریشانیاں دامن گیر رہیں۔ جنوری کے آخری ہفتہ میں دل کے اندر جا کر ڈاکٹر حضرات نے کچھ کام کیا۔ اس کے بعد میں اب بہت اچھا محسوس کررہا ہوں۔ جسمانی، نفسیاتی اور ذہنی طور پر مجھ میں کافی توانائی آ گئی ہے۔ ایک اچھی خبر یہ بھی ہے کہ ہمارے ایک محترم دوست میری علالت طبع کے پیش نظر انجمن کی ذمہ داری سنبھالنے کے لئے تیار ہیں۔ اللہ ان کو خوش رکھے۔ ان کی اس بات سے میرا خون سیروں بڑھ گیا :ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جہاں میں!

میں نے حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ ابھی اسی طرح انجمن کو جاری رکھوں۔ خدا نخواستہ اگر حالات ناسازگار ہوجاتے ہیں تو اسے انہیں دوست کے سپرد کردوں گا۔ فی الحال میں یہ کام کر سکتا ہوں۔ اللہ کی ذات سے مایوس نہیں ہوں۔ انشا اللہ جو ہوگا بہتر ہی ہوگا۔ آپ سب کی دعائوں اور نیک تمنائوں کا شکر گزار ہوں اور ساتھ ہی درخواست ہے کہ ازراہ کرم اپنی نگاہ کرم انجمن پر بدستور رکھیں۔ شکریہ۔

سرورعالم راز





محترم جناب سرور عالم راز سرورؔ صاحب! السلام علیکم

پڑھ کر بُہت خوشی ہوئی۔ ایک تو آپ کی صحت کے حوالے سے کُچھ اطمنان ہؤا ، دوسرا انجمن کے ختم نہ ہونے کی اطلاع۔ اُن مہربان دوست کا بھی شکریہ جن کی مہربانی سے تسلی ہوئی۔

صاحب! ہم نے تو ڈنڈے پر آٹے کی پوٹلی باندھ رکھی تھی کہ جانے کب کُوچ کرنا پڑے۔ اب سکون ہؤا۔ :)

دُعا گو






محترم سرور صاحب سلام حاضر

کیا پدی اور کیا پدی کا شوربہ والی مثال سو فیصد مجھ پر صادق آگئی۔ آپ نے وی بی جی کو جواب دیا بہت اچھا کیا کہ یہ ان کا حق تھا کہ جواب ملے۔ مجھے ان سے گلہ نہیں لیکن اپنی کم مائیگی کا احساس ہو گیا۔ اللہ سب کو خوش رکھے، تندرست و توانا رکھے اور انجمن کو تا قیامت جگمگاتا رکھے۔ آمین۔

طالبِ دعا
مرے دوستوں نے مجھ کو آخر ہے کیا دیا
 محبت، خلوص، پیار،  باقی  ہے  کیا  بچا

غیرحاضر سرور عالم راز

  • Muntazim-o-Mudeer
  • Saaheb-e-adab
  • ******
  • تحریریں: 6238
  • جنس: مرد
    • Kalam-e-Sarwar
جواب: ایک نہایت اہم بات
« Reply #17 بروز: فروری 20, 2016, 01:26:04 شام »
maire mota'alaq ghar main yah'hi moghalta chala aa raha hai kah abhi giya bas ab samjho gya laikin gya nahain hoon. jab bhi zara tabiyat sambhalti hai likhnay parhnay bhaith jata hoon. maire khaesh hai kuch na'kuch karta howa jaoon. agarchah yah karna baikar samjha jata hai phir bhi yah baikar kaam karnay par tabiat ke hawala se majboor hoon. Raz sahib se bare admi ke monh se yah son kar ajeeb laga hai kah woh kaam nahain kar saktay. na karna shaed oon ke bas main nahain rahe ga.
Allah onhain ta'akhir karta hi rakhe
plz sab kaho amein

مکرمی جناب حسنی صاحب:سلام مسنون
آپ کا خط دیکھ کر لطف آیا۔ یہ "مغالطہ" ہر عمر رسیدہ کی طرف سے گھر والوں کو رہتا ہے۔ اور یہ ہے بھی فطرت کا تقاضا۔ آخر ہر ایک کو جانا تو ہے۔ رہ گیا کام کا سوال تو لکھنے پڑھنے کاکام اور ہے اورکسی چوپال کی ذمہ داری نبھانا اور۔ میں بھی لکھتا پڑھتا رہتا ہوں۔ ابھی اپنی ایک کتاب کو دہرا کر نئے ایڈیشن کے لئے تیار کیا ہے اور اب ایک مقالہ لکھ رہا ہوں۔ چوپال کے کام میں اس پر مستقل نگاہ رکھنا، لوگوں سے بات کرنا، کچھ کی باتیں سننا اور مختلف مسائل کے حل کی کوشش کرنا وغیرہ شامل ہیں۔ ان میں ذہنی کوفت کا اکثر سامنا ہوتا ہے اور اس کے علاوہ جب پرانے دوست ایک ایک کر کے بغیر بتائے رخصت ہوتے ہیں تو افسوس الگ ہوتا ہے۔ خیر، اب آپ اور میں یوں کرتے ہیں کہ جب تک دماغ اور ہاتھ پیر کام کر رہے ہیں اس کارخیر سے جڑے رہتے ہیں۔ جب وقت آئے گا تو ہم بھی بقول وی بی جی "ڈنڈے سے ستو کی پوٹلی باندھ کر" چل دیں گے۔ رہے نام اللہ کا۔
انجمن میں آتے رہئے اور حسب ہمت وتوفیق دوسروں پر بھی لکھتے رہئے۔ اللہ آپ کو سلامت رکھے۔

سرور عالم راز



غیرحاضر سرور عالم راز

  • Muntazim-o-Mudeer
  • Saaheb-e-adab
  • ******
  • تحریریں: 6238
  • جنس: مرد
    • Kalam-e-Sarwar
جواب: ایک نہایت اہم بات
« Reply #18 بروز: فروری 20, 2016, 01:40:31 شام »

یاران اردو انجمن: سلام مسنون!

آپ کو یاد ہوگا کہ کچھ ہی عرصہ قبل اردو انجمن کو بند کرنے کا ارادہ ظاہر کیا گیا تھا۔ میں دل کا مریض ہوں اور گزشتہ دنوں کافی پریشانیاں دامن گیر رہیں۔ جنوری کے آخری ہفتہ میں دل کے اندر جا کر ڈاکٹر حضرات نے کچھ کام کیا۔ اس کے بعد میں اب بہت اچھا محسوس کررہا ہوں۔ جسمانی، نفسیاتی اور ذہنی طور پر مجھ میں کافی توانائی آ گئی ہے۔ ایک اچھی خبر یہ بھی ہے کہ ہمارے ایک محترم دوست میری علالت طبع کے پیش نظر انجمن کی ذمہ داری سنبھالنے کے لئے تیار ہیں۔ اللہ ان کو خوش رکھے۔ ان کی اس بات سے میرا خون سیروں بڑھ گیا :ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جہاں میں!

میں نے حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ ابھی اسی طرح انجمن کو جاری رکھوں۔ خدا نخواستہ اگر حالات ناسازگار ہوجاتے ہیں تو اسے انہیں دوست کے سپرد کردوں گا۔ فی الحال میں یہ کام کر سکتا ہوں۔ اللہ کی ذات سے مایوس نہیں ہوں۔ انشا اللہ جو ہوگا بہتر ہی ہوگا۔ آپ سب کی دعائوں اور نیک تمنائوں کا شکر گزار ہوں اور ساتھ ہی درخواست ہے کہ ازراہ کرم اپنی نگاہ کرم انجمن پر بدستور رکھیں۔ شکریہ۔

سرورعالم راز





محترم جناب سرور عالم راز سرورؔ صاحب! السلام علیکم

پڑھ کر بُہت خوشی ہوئی۔ ایک تو آپ کی صحت کے حوالے سے کُچھ اطمنان ہؤا ، دوسرا انجمن کے ختم نہ ہونے کی اطلاع۔ اُن مہربان دوست کا بھی شکریہ جن کی مہربانی سے تسلی ہوئی۔

صاحب! ہم نے تو ڈنڈے پر آٹے کی پوٹلی باندھ رکھی تھی کہ جانے کب کُوچ کرنا پڑے۔ اب سکون ہؤا۔ :)

دُعا گو






محترم سرور صاحب سلام حاضر

کیا پدی اور کیا پدی کا شوربہ والی مثال سو فیصد مجھ پر صادق آگئی۔ آپ نے وی بی جی کو جواب دیا بہت اچھا کیا کہ یہ ان کا حق تھا کہ جواب ملے۔ مجھے ان سے گلہ نہیں لیکن اپنی کم مائیگی کا احساس ہو گیا۔ اللہ سب کو خوش رکھے، تندرست و توانا رکھے اور انجمن کو تا قیامت جگمگاتا رکھے۔ آمین۔

طالبِ دعا

عزیز مکرم کفیل صاحب: سلام مسنون
آپ کا خط دیکھا۔پڑھ کر خود پر غصہ بھی آیا اور ترس بھی۔ آپ کی شکایت بجا ہے کہ میں نے آپ کے خط کا جواب نہیں دیا۔ اب یاد نہیں کہ کیوں نہ دے سکا۔ ہو سکتا ہو کہ اس وقت مرض کا غلبہ زیادہ ہو۔ یا میں کاہلی کا شکار ہو گیا ہوں۔ بہر کیف وجہ جو بھی ہو جواب واجب تھا۔ نہ دے سکا اور میں نہ صرف شرمندہ ہوں بلکہ معذرت خواہ بھی ہوں۔ کسی چوپال کی ذمہ داری کا ایک حصہ یہ بھی ہے کہ اس کے اراکین کی باتوں کاجواب وقت پر دیا جائے۔ اس فرض میں کوتاہی بھی ہو جاتی ہے۔ آپ یقین کیجئے کہ روزانہ میرے پاس تقریبا ڈیڑھ سو ای میل آتے ہیں۔ بیشتر کو ایک نظر ڈال کر حذف کردیتا ہوں۔اس گھپلے میں بعض اوقات کام کے ای میل بھی ردی کی ٹوکری میں چلے جاتے ہیں اور پھر شرمندگی اٹھانی ہوتی ہے۔ ایسا ہی کچھ آپ کے خط کے ساتھ ہوا ہوگا۔ خیر، آپ کی یا کسی اور کی دل آزاری کبھی میرا مقصود نہیں ہوتی ہے۔ امید ہے کہ کوتاہی کومعاف کر دیں گے۔ آپ نے "پدی اورپدی کے شوربے" کے ذکر سے یہ باور کرایا ہے جیسے میں نے آپ کوچھوٹا سمجھ کر دانستہ نظر انداز کیا تو ایسی کوئی بات نہیں تھی۔ کہتا ہوں سچ کہ چھوٹ کی عادت نہیں مجھے۔
آئندہ خیال رکھوں گا۔ اتنا تو آپ کوماننا ہوگا کہ چوپال پر ہر خط کا جواب دینا ہمیشہ ممکن نہیں ہوتا ہے۔ اللہ رحم فرمائے۔ باقی رہ گیا راوی تو وہ غریب اب چین بولنے کا ایسا عادی ہوگیا ہے کہ اورکوئی لفظ منھ سے نکلتا ہی نہیں ہے!

سرور عالم راز




غیرحاضر dr maqsood hasni

  • Adab Dost
  • ***
  • تحریریں: 819
جواب: ایک نہایت اہم بات
« Reply #19 بروز: فروری 22, 2016, 12:41:49 صبح »
yah hoee na baat sachi kehta hoon mein to dar sa gya tha. jab tak hain hazri hoti rehni chahiay. chalo kuch na'kuch to hota hi rahe ga. aap ke hukam ki dil o jan se tameel ki koshesh karoon ga, mein pukhta'kar to nahain hoon jo ahbaab ke kahe par ra'ay doon haan aap ke hukam ki tameel main ahbaab ki kavish ha par kuch na'kuch zaroor likhta rahoon ga. aap ne wada kya hai ab aap zaroor aatay rahain.

غیرحاضر vb jee

  • Adab Fehm
  • ****
  • تحریریں: 1248
  • جنس: مرد
جواب: ایک نہایت اہم بات
« Reply #20 بروز: مارچ 08, 2016, 01:08:07 صبح »

یاران اردو انجمن: سلام مسنون!

آپ کو یاد ہوگا کہ کچھ ہی عرصہ قبل اردو انجمن کو بند کرنے کا ارادہ ظاہر کیا گیا تھا۔ میں دل کا مریض ہوں اور گزشتہ دنوں کافی پریشانیاں دامن گیر رہیں۔ جنوری کے آخری ہفتہ میں دل کے اندر جا کر ڈاکٹر حضرات نے کچھ کام کیا۔ اس کے بعد میں اب بہت اچھا محسوس کررہا ہوں۔ جسمانی، نفسیاتی اور ذہنی طور پر مجھ میں کافی توانائی آ گئی ہے۔ ایک اچھی خبر یہ بھی ہے کہ ہمارے ایک محترم دوست میری علالت طبع کے پیش نظر انجمن کی ذمہ داری سنبھالنے کے لئے تیار ہیں۔ اللہ ان کو خوش رکھے۔ ان کی اس بات سے میرا خون سیروں بڑھ گیا :ابھی کچھ لوگ باقی ہیں جہاں میں!

میں نے حالات کو مدنظر رکھتے ہوئے فیصلہ کیا ہے کہ ابھی اسی طرح انجمن کو جاری رکھوں۔ خدا نخواستہ اگر حالات ناسازگار ہوجاتے ہیں تو اسے انہیں دوست کے سپرد کردوں گا۔ فی الحال میں یہ کام کر سکتا ہوں۔ اللہ کی ذات سے مایوس نہیں ہوں۔ انشا اللہ جو ہوگا بہتر ہی ہوگا۔ آپ سب کی دعائوں اور نیک تمنائوں کا شکر گزار ہوں اور ساتھ ہی درخواست ہے کہ ازراہ کرم اپنی نگاہ کرم انجمن پر بدستور رکھیں۔ شکریہ۔

سرورعالم راز





محترم جناب سرور عالم راز سرورؔ صاحب! السلام علیکم

پڑھ کر بُہت خوشی ہوئی۔ ایک تو آپ کی صحت کے حوالے سے کُچھ اطمنان ہؤا ، دوسرا انجمن کے ختم نہ ہونے کی اطلاع۔ اُن مہربان دوست کا بھی شکریہ جن کی مہربانی سے تسلی ہوئی۔

صاحب! ہم نے تو ڈنڈے پر آٹے کی پوٹلی باندھ رکھی تھی کہ جانے کب کُوچ کرنا پڑے۔ اب سکون ہؤا۔ :)

دُعا گو




عزیز مکرم وی بی جی :سلام مسنون
خط کے لئے ممنون ہوں؛البتہ یہ معلوم ہو کر تشویش ہوئی کہ آپ لاٹھی کے ساتھ آٹے کی پوٹلی باندھے ہوئے نکلنے کو پا بہ رکاب تھے۔ بھائی پچھلے زمانے میں لوگ جب ایسا ارادہ کرتے تھے تو آٹے کے بجائے ستو کی پوٹلی باندھتے تھے کہ صرف آٹے سے کیسے پیٹ بھرے گا! :D ہاں اگر ساتھ ہی کچی پیاز کی دو ایک گانٹھیں رکھ لیتے تو دو وقت پیٹ بھرنے کا سامان ہو جاتا۔ چلئے شکر خدا کہ سفر کی نوبت نہیں آئی اور آئندہ کو کان ہوئے۔
باقی راوی چین بولتا ہے۔

سرور عالم راز




محترم جناب سرور عالم راز سرورؔ صاحب! السلام علیکم

اب تو ہر وقت معزرت نامہ ہماری جیب میں رہتا ہے۔ سو آپ کی خدمت میں پیش ہے۔ نکمے ہو گئے ہیں لیکن وائے ناکامیئے قسمت کہ  وجہ وہ نہیں جس نے غالب کو بھی نکما کر دیا تھا۔ :)

صاحب! پا بہ رکاب تو بزرگ ہؤا کرتے تھے ہم قافیتاً نہیں بلکہ حقیقتاً فقط پا بہ جُراب ہی ہو سکتے تھے۔

اب دو وجوہات کی بنا پر آپ کا شکریہ ادا کرنا چاہیں گے۔ ایک تو یہ کہ آپ نے ہماری رہنمائی فرما دی۔ آئیندہ سَتو لے کر نکلیں گے تو یقیناً  بھوک کا درست، منتقی اور بروقت علاج ممکن ہو سکے گا۔ البتہ پیاز کی گانٹھوں والا مشورہ اپنی جگہ تو درست ہے، لیکن وہ بزرگ ہی تھے جو پیاز کو مُکا مار کر پھِس دیتے تھے اور پھر ہاتھوں سے مسل کر اُس کا پانی نکال لیا کرتے تھے۔ ہمارا تو وہ عالم ہے کہ اگر پیاز کو مُکا ماریں تو مفعول کی بجائے فاعل پھسپھسا ہو جانے کا ڈر ہے۔ :) سو ہم صرف ستو ہی لے کر نکلا کریں گے۔

دوسری وجہ یہ ہے کہ آپ نے ہماری غلط فہمی دور فرما دی کہ گٹھڑی میں آٹا نہیں لے کر جایا جاتا۔ نتیجہ یہ کہ اب ہم کہیں بھی یہ بات نہ دُہرائیں گے جس سے ہماری عزتِ سادات بچ رہے گی۔ جِسے بغیر عشق  کئیے گنوا دینا یقناً گھاٹے کا سودا ہے، اور ہمیں قطعاً گوارا نہیں۔ :)

ایک بار پھر شکریہ کہ رہنمائی فرمائی۔

دُعا گو


گنگناتی رهے گی انھیں تو سدا
اتنے نغمے تِرے نام کر جائیں گے

 

Copyright © اُردو انجمن