اُردو انجمن

 


مصنف موضوع: آپ ساتھ چلنے لگے زیست مسکرانے لگی  (پڑھا گیا 108 بار)

0 اراکین اور 1 مہمان یہ موضوع دیکھ رہے ہیں

غیرحاضر Ismaa'eel Aijaaz

  • Saaheb-e-adab
  • *****
  • تحریریں: 3156
آپ ساتھ چلنے لگے زیست مسکرانے لگی
« بروز: ستمبر 06, 2017, 05:49:14 صبح »


قارئین کرام آداب عرض ہیں تازہ کلام پیش خدمت ہے امید ہے پسند آئے گا اپنی آرا سے نوازیے شکریہ
عرض کیا ہے

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
آپ ساتھ چلنے لگے زیست مسکرانے لگی
ساری کائنات نظارے حسیں دکھانے لگی

ہوش کھویا تم نے وہاں ہوش چاہیے تھا جہاں
ناامیدی بڑھنے لگی عقل جب ٹھکانے لگی

خوش نصیبی لوٹ گئی قدر تجھ سے ہو نہ سکی
بد نصیبی در کو ترے آ کے کھٹکھٹانے لگی

دوستی کے نام چلا کاروبار چاروں طرف
دوست بن کے سب سے غرض ہاتھ ہے ملانے لگی

آدمی نے ڈھنگ بدل ڈالا اپنی زندگی کا
بود و باش پیار محبت کی بدلی جانے لگی

ایک ایک کر کے مرا ساتھ دوست چھوڑ گئے
میرے دشمنوں کو ہنسی مجھ پہ جب سے آنے لگی

تم پہ کھل گئی ہے حقیقت خیالؔ زندگی کی
پھر قدم قدم تمہیں کیوں زیست آزمانے لگی

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
آپ کی توجہ کا طلبگار
اسماعیل اعجاز خیالؔ


محبتوں سے محبت سمیٹنے والا
خیال آپ کی محفل میں آچ پھر آیا

خیال

muHabbatoN se muHabbat sameTne waalaa
Khayaal aap kee maiHfil meN aaj phir aayaa

(Khayaal)

غیرحاضر nawaz

  • Adab Shinaas
  • **
  • تحریریں: 362
جواب: آپ ساتھ چلنے لگے زیست مسکرانے لگی
« Reply #1 بروز: ستمبر 11, 2017, 03:59:48 صبح »
محترم اِسماعیل اعجاز صاحب سلامِ مسون

روایت کو برقرار رکھتے ہوئے ایک عمدہ
غزل پیش کرنے پر داد حاضر ہے،بلکہ میں یہ
کہوں گا کہ  آپ کا کلام خوب سے خوب تر کی
طرف گامزن ہے۔

اِس غزل کے شعر:
آدمی نے ڈھنگ بدل ڈالا اپنی زندگی کا
بود وباش پیار محبت کی بدلی جانے لگی

لفط بود و باش ( سکونت رہن سہن) کے معنی
اس مصرع میں رکھ رکھاوٗ میں کچھ زیادہ
مناسب محسوس نہیں ہوئے محبت کے ساتھ
اس لفظ کا میل نہیں ہو رہا بود و باش کی جگہ
کوئے اور لفظ ہو تو کیسا رہے گا

اللہ حافظ  دعا گو  نواز

غیرحاضر Ismaa'eel Aijaaz

  • Saaheb-e-adab
  • *****
  • تحریریں: 3156
جواب: آپ ساتھ چلنے لگے زیست مسکرانے لگی
« Reply #2 بروز: ستمبر 11, 2017, 11:32:03 شام »
محترم اِسماعیل اعجاز صاحب سلامِ مسون

روایت کو برقرار رکھتے ہوئے ایک عمدہ
غزل پیش کرنے پر داد حاضر ہے،بلکہ میں یہ
کہوں گا کہ  آپ کا کلام خوب سے خوب تر کی
طرف گامزن ہے۔

اِس غزل کے شعر:
آدمی نے ڈھنگ بدل ڈالا اپنی زندگی کا
بود وباش پیار محبت کی بدلی جانے لگی

لفط بود و باش ( سکونت رہن سہن) کے معنی
اس مصرع میں رکھ رکھاوٗ میں کچھ زیادہ
مناسب محسوس نہیں ہوئے محبت کے ساتھ
اس لفظ کا میل نہیں ہو رہا بود و باش کی جگہ
کوئے اور لفظ ہو تو کیسا رہے گا

اللہ حافظ  دعا گو  نواز


جناب محترم نواز صاحب

وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

جانبِ عالی آپ کی محبتیں و عنایتیں سر آنکھوں پر اللہ آپ کو دونوں جہانوں کی عزتوں سے نوازے بہت شکریہ آپا آپ کو میرا کلام پسند آیا ، نیز آپ نے ہے کہ

اِس غزل کے شعر:
آدمی نے ڈھنگ بدل ڈالا اپنی زندگی کا
بود وباش پیار محبت کی بدلی جانے لگی

لفط بود و باش ( سکونت رہن سہن) کے معنی
اس مصرع میں رکھ رکھاوٗ میں کچھ زیادہ
مناسب محسوس نہیں ہوئے محبت کے ساتھ
اس لفظ کا میل نہیں ہو رہا بود و باش کی جگہ
کوئے اور لفظ ہو تو کیسا رہے گا

جی میرا کہنے کا مقصد تو یہی ہے کہ پیار محبت کا قیام رہن سہن بدل گیا ہے پیار محبت کو جہاں سکونت اختیار کرنی چاہیے وہاں نہیں ہے کہیں اور ہے کل ہی ایک احساسِ محرومی سے دوچار نوجوان ایف بی پر اپنے چاہنے والوں سے سراپا ء سوال ملا کہ بتائیے آپ میں سے کس کس کی گرل فرینڈ ہے ، گرل فرینڈ بوائے فرینڈ کا رشتہ تمام جملہ حقوق ازدواجیت کو پیپر ورک کے بغیر مروج ہونا کہتے ہیں گویا تمام تعلقات بغیر کسی مکتوبی شکل جس میں گواہوں اور قاضی کا  مشروط ہونا اور دستخط کے ساتھ ذمہ داری لیتے ہوئے غیر محدود مدت تک کے لیے ایک دوسرے سے رشتہء ازدواج میں منسلک ہونا مراد ہے جس کے لیے ایک سند جاری کی جاتی ہے (نکاح نامہ) اس سے مستثنیٰ ہو کر ازدواجی تعلقاتِ جسمانی و روحانی کی اجازت ہے

اور ایک لمبی قطار امتِ مسلمہ کی گرل فرینڈ کے رشتے کے ایجاب و قبول کا اقرار نامہ کی فخریہ  پیش کش تبصرہ نگاری ایف بی کے چوارہے پر چسپاں تھی ، میں نے احتجاج کیا کہ یہ جو آپ اجتماعی کاروبار کر رہے ہیں اس کے ثمرات آپ کے گھر میں داخل ہو کر آپ کی بہن بیٹی کو کسی بوائے فرینڈ کی خوشنودی پر مجبور کر دیں گے تو خفا ہو گئے ، فرمانے لگے آپ نے بہت گندی بات کی ہے مجھ سے خفا ہو گئے انہوں نے میری سچ بات کا بہت برا منایا  (لّو کر لّو گل) ، لو بھلا بتاؤ جب موصوف کسی کی بہن بیٹی کو گرل فرینڈ بنائے بیٹھے ہیں اور دوسروں کو اس رشتے کے لیے دعوت دے رہے ہیں تو آپ ہی بتائیے ان کی بہن بیٹی کیوں نہیں کسی کی گرل فرینڈ بن سکتی ؟ جب کہ ایک شخص انفرادی طور پر کسی خطا میں ملوث ہو تو بھی معاشرہ خراب ہوتا ہے چہ جائیکہ کوئی لوگوں کو اجتماعی دعوت دے انہیں اس جرم پر تیار کرے انہیں اکسائے ، کتنا سنگین غیر اخلاقی  اور قبیح فعل ہے

یہ شعر معاشرے کی بےراہروی اور ڈھٹائی کے لیے سراپاء احتجاج ہے

آدمی نے ڈھنگ بدل ڈالا اپنی زندگی کا
بود وباش پیار محبت کی بدلی جانے لگی

آپ ہی بتائیے اسے کیسے بدل دوں

اللہ آپ کو سدا سلامت رکھے اللہ آپ کو دونوں جہانوں کی خوشیاں عطا فرمائے

اپنا بہت خیال رکھیے اپنی دعاؤں میں یاد رکھیے

دعاگو
« آخری ترمیم: ستمبر 11, 2017, 11:41:40 شام منجانب Ismaa'eel Aijaaz »
محبتوں سے محبت سمیٹنے والا
خیال آپ کی محفل میں آچ پھر آیا

خیال

muHabbatoN se muHabbat sameTne waalaa
Khayaal aap kee maiHfil meN aaj phir aayaa

(Khayaal)

 

Copyright © اُردو انجمن