اُردو انجمن

 


مصنف موضوع: Aitabaar Naheen Ghazal  (پڑھا گیا 121 بار)

0 اراکین اور 1 مہمان یہ موضوع دیکھ رہے ہیں

غیرحاضر nawaz

  • Adab Shinaas
  • **
  • تحریریں: 419
Aitabaar Naheen Ghazal
« بروز: جون 08, 2018, 04:46:28 صبح »
محترم اراکین انجمن و احباب السلام`علیکم
آپ صاحبان کے  لۓایک غزل پیش کرتا ہوں تنقید اور تبصرہ اور مفید آرا
کی درخواست۔

نہ روک آج مجھے دل پہ اختیار نہیں
کہ مجھ کو اب تری باتوں کا اعتبار نہیں

مری نظر رہی اہل ستم کو دیکھا کۓ
شکر خدا کہ کوئ بات دل فگار نہیں

دیار جاں میں ستم بار بار مجھ پہ ہوا
مگر غضب کہ ملا لطف ایک بار نہیں

انھیں کے بیچ میں تاریکی کا بسیرا ہے
نئ  سحر کا جنہیں کوئ انتظار نہیں

وہ رہنما نہیں ہے اعتماد کے قابل
عوام کے لۓ دل جس کا بے قرار نہیں

نواز اب ہے نہیں حق اسے تو جینے کا
صداۓ وقت پہ جو شخص ہوشیار نہں                       



غیرحاضر nawaz

  • Adab Shinaas
  • **
  • تحریریں: 419
جواب: Aitabaar Naheen Ghazal
« Reply #1 بروز: جون 12, 2018, 02:23:00 صبح »
احباب انجمن سلام علیکم

ع  یہ دور وہ ہے کہ بیٹھے رہو چراغ تلے
   سبھی کو بزم میں دیکھو مگر دکھائ نہ دو

غیرحاضر سرور عالم راز

  • Muntazim-o-Mudeer
  • Saaheb-e-adab
  • ******
  • تحریریں: 6348
  • جنس: مرد
    • Kalam-e-Sarwar
جواب: Aitabaar Naheen Ghazal
« Reply #2 بروز: جون 12, 2018, 04:22:03 شام »
احباب انجمن سلام علیکم

ع  یہ دور وہ ہے کہ بیٹھے رہو چراغ تلے
   سبھی کو بزم میں دیکھو مگر دکھائ نہ دو


مکرمی نواز صاحب: سلام علیکم
شعر کے پردے میں شکایت بجا لیکن آپ بھی یہ سوچیں کہ جب آپ خود دوسروں پر نہیں لکھتے ہیں تو ان کی دل شکنی بھی تو ہوتی ہوگی۔ انجمن میں اشرف صاحب کی غزل لگی ہے، اسی طرح دوسرے بھی آتے جاتے رہتے ہیں۔ آپ کا بھی فرض ہے کہ چراغ تلے سے نکل کر ان غزلوں پر اپنی رائے دیں۔ برا نہ مانیں بلکہ سنجیدگی سے سوچیں کہ اس طرح تو یہ دو کوڑی کی انجمن اتنی بھی نہیں رہے گی اور بالکل ہی ختم ہو جائے گی۔ امید ہے کہ میری گزارش پرغور کریں گے اور لکھیں گے۔ شکریہ

سرورعالم راز



غیرحاضر Ismaa'eel Aijaaz

  • Saaheb-e-adab
  • *****
  • تحریریں: 3259
جواب: Aitabaar Naheen Ghazal
« Reply #3 بروز: جون 12, 2018, 08:30:14 شام »
محترم اراکین انجمن و احباب السلام`علیکم
آپ صاحبان کے  لۓایک غزل پیش کرتا ہوں تنقید اور تبصرہ اور مفید آرا
کی درخواست۔

جناب محترم نواز صاحب
وعلیکم السلام ورحمتہ اللہ وبرکاتہ

جنابِ عالی آپ بہت ذوق و شوق سے اس اردو انجمن کی رونقیں بحال رکھتے ہیں یقیناً یہ آپ کا خلقص ہے آپ کی وفاؤں کا ثبوت ہے آپ کی محبت ہے آج کا دور اپنے ساتھ بہت سی لوازمات لیے ہوئے ہے جن میں سوشل میڈیا پیش پیش ہے اس نے اپنے علاوہ ہر طرف سے ہر ایک کو بیگانہ کر رکھا ہے الا ماشااللہ جنہیں اللہ نے اس کے سحر سے محفوظ کر رکھا ہے اس کے علاوہ غمِ دوراں نے غمِ جاناں کو بھلا رکھا ہے آ، خیر صاحب آپ کی غزل نظر نواز ہوئی ایک مجموعی طور پر پسند آئی ایک اچھی کاوش کے لیے مبارکباد اور ڈھیروں داد قبول فرمائیے کچھ باتیں ذہن میں آئیں جن میں اسلوب اور اوزان کو بھی مزید بہتری کی گنجائش لیے پایا ، سیکھنے کی غرض سے گوشگزر کرنے کی اجازت چاہوں گا تاخیر سے حاضرِ خدمت ہونے کی معذرت قبول فرمائیے ، شکریہ  ;D


اقتباس

نہ روک آج مجھے دل پہ اختیار نہیں
کہ مجھ کو اب تری باتوں کا اعتبار نہیں



مطلع اچھ اہے داد قبول فرمائیے ، مجھے دل پہ اختیار نہیں بھی درست ہے ، ذہن میں آیا کہ ایک اور طرح سے بھی کہا جاسکتا ہے
’’ نہ روک آج مجھے خود پہ اختیار نہیں ‘‘
بہر حال صاحب خوب کہا آپ نے

اقتباس
مری نظر رہی اہل ستم کو دیکھا کۓ
شکر خدا کہ کوئ بات دل فگار نہیں


پہلا مصرع اسلوب میں غیر مانوس لگا شاید میری کم نگاہی آرے آئی آپ کہنا چاہتے ہیں کہ میری نظر اہلِ ستم کو دیکھتی رہی جسے آپ نے ’’ دیکھا کیے ‘‘ باندھا جس سے مجھے اس مصرعے کی دلکشی میں کمی نظر آتی ہے ، جب کہ دوسرا مصرع الفاظ کی نشست و برخاست کے ردوبدل سے بحر کے لحاظ سے درست ہو جاتا ہے اگر آپ کہیں
شُکر کا وزن 12 ہے

آپ نے غالباً 21 باندھا ہے ، اگر میں غلطی پر ہوں تو از راہِ کرم میری اصلاح فرمائیے شکریہ
 

خدا کا شکر کوئی بات دل فگار نہیں

مفاعلن؛فَعِلاتن؛مفاعلن؛فَعِلُن

اس شعر میں سب سے دلچسپ بات اس کا پیغام ہے کہ اہلِ ستم کی ساری کاوشیں اکارت ہوئیں ان کے سارے جتن خاکِ پا ہوئے کہ آپ کی صحت پر ان کی ستم ظریفیوں کا کوئی اثر نہیں پڑا یہ تو بڑی خوش آئند بات ہے اللہ آپ کو سدا سلامت رکھے۔
شکاری خود یہاں شکار ہو گیا
یہ کیا غضب ہوا یہ کیا ستم ہوا نہ جانوں میں نہ جانے وہ ۔۔۔۔
بڑا لطف آیا صاحب

اقتباس
دیار جاں میں ستم بار بار مجھ پہ ہوا
مگر غضب کہ ملا لطف ایک بار نہیں


یہاں کچھ اختلاف ہے ، آپ چاہتے ہیں کہ اہلِ ستم کی ستم ظریفیوں سے آپ لطف اندوز بھی ہوں ، مطلب آپ کہنا چاہتے ہیں کہ مزہ نہیں آیا ، آپ نے تو ستمگر کا دل توڑ دیا اس کا وقت اس کی جدوجہد اس کی محنت ساری رائیگاں گئی ، یہ کیا کم لطف کی بات ہے کہ اس کا کوئی وار کار گر نہیں ہوا ، مزے کیجیے صاحب یہ بھی باعثِ لطف ہے

خیر داد قبول فرمائیے

اقتباس
انھیں کے بیچ میں تاریکی کا بسیرا ہے
نئ  سحر کا جنہیں کوئ انتظار نہیں


یہ تو سولہ آنے درست فرمایا آپ نے ، لیکن سحر پھر بھی آتی ہے  جس سے محروم رہنے والے استفادہ نہیں کرتے

اقتباس
وہ رہنما نہیں ہے اعتماد کے قابل
عوام کے لۓ دل جس کا بے قرار نہیں


انتخابات کا زمانہ قریب ہے اور رہنماؤن کی حقیقت سے کون واقف نہیں یہاں رہنما راہزن ہیں

اقتباس
نواز اب ہے نہیں حق اسے تو جینے کا
صداۓ وقت پہ جو شخص ہوشیار نہں                        [/size]


خوب فرمایا ہے صاحب کیا بات ہے ، دوسرا مصرع اگر کہیں

صدائے وقت پہ ہوتا جو ہوشیار نہیں

خیر صاحب آپ کی دلکش کاوش ذرا سی مزید محنت سے مزید نکھر جائے گی ، اللہ کرے زورِ قلم اور زیادہ ، اللہ آپ کو دونوں جہانوں کی عزتیں مرحمت فرمائے ، اپنا بہت خیال رکھیے اپنی دعاؤں میں یاد رکھیے
والسلام
محبتوں سے محبت سمیٹنے والا
خیال آپ کی محفل میں آچ پھر آیا

خیال

muHabbatoN se muHabbat sameTne waalaa
Khayaal aap kee maiHfil meN aaj phir aayaa

(Khayaal)

غیرحاضر nawaz

  • Adab Shinaas
  • **
  • تحریریں: 419
جواب: Aitabaar Naheen Ghazal
« Reply #4 بروز: جون 13, 2018, 01:12:52 صبح »
قابل صد احترام سرور عالم سرور راز صاحب

آپ کا جواب پڑھا جواب تحریر کرنے کا  شکریہ میں حقیقتا" دوسروں کی
غزلوں پر تنقید اور تبصرہ کم کرتا ہوں اولا" تنقید اور تبصرہ کا جو معیار
ہے اس تک پہنچنے کی کوشش ہوتی ہے۔ دوم کچھ شعراءاکرام  کے کلام
پر تبصرہ پیش کیا تو جواب ندارد۔۔بلکل یوں کہ سلام پیش کا جواب ندارد
ایس صورت میں کیا دلی کیفیت ہو گی'
بعض دفعہ تو کوئ شاعر یا شاعرہ کسی غزل پر تنقید و تبصرہ کرنے کے بعد
یہ اضافی نوٹ لگاتے ہیں کہ جواب ضرور دیں
میں اپنی پوری ادبی صلاحیتوں کے سہارے شعراء  حضرات کے کلام پر کچھ
ضرور تحریر کروں گا۔
اپنی عالمانہ راۓ سے ہم سب کو فیض پہنچاتے رہۓ  سدا شاد و آباد رہۓ
                   دعاؤں کا طالب     نواز         "عید مبارک"

غیرحاضر nawaz

  • Adab Shinaas
  • **
  • تحریریں: 419
جواب: Aitabaar Naheen Ghazal
« Reply #5 بروز: جون 14, 2018, 04:33:31 صبح »
محترم اسماعیل اعجاز صاحب سلام مسنون

آپ کا انتہائ ممنون ہوں کہ میری غزل کے ہر شعر اور ہر مصرع پر
اپنی سخن سنجی کا ثبوت دیا ، داد کے لۓ شکریہ۔
ان مقامات پر جہاں آپ نے اصلاح دی تصیح کرکے مزید بہتر صورت میں پیش
کرونگا'
سدا خوش رہۓ        عید مبارک    نواز

 

Copyright © اُردو انجمن